بنات اہلسنت

صنف نازک کی تعلیم

User Rating: 0 / 5

Star InactiveStar InactiveStar InactiveStar InactiveStar Inactive
صنف نازک کی تعلیم
خالد انور
تعلیم زندگی ہے ،اور جہالت موت،تعلیم سے زندگی سنورتی ہے اور جہالت سے امور بگڑتے ہیں ، جہاں تعلیم ہے وہاں روشنی ہے ،اور جہاں جہالت ہے وہ ایک اندھیرنگری ہے ،تعلیم ایک فطری چیز ہے اور جس قوم نے اس فطرت کو قبول کیا وہ ترقی کرتی چلی گئی ،اسی لئے کہتے ہیں :قوموں کی ترقی کا پہلازینہ تعلیم ہے۔
اسلام کی آمدسے قبل سرزمین عرب میں ساری برائیاں پائی جاتی تھیں،وہاں پر بداخلاقی تھی ،بداعمالی تھی ، شراب نوشی تھی ،ظلم وجورتھا،قتل وغارت گری تھی ، سماج ومعاشرہ انتہائی پراگندہ ہوچکاتھا،مذہب اسلام نے اس زمانہ کو زمانہ جاہلیت سے تعبیر کیاہے ،اس کا مطلب صاف ہے کہ کہ تمام برائیوں ،بے حیائیوں اور ناانصافیوں کا سرچشمہ جہالت ہے
Read more ...

تاریخ اسلام میں ماہ صفر کی حیثیت

User Rating: 0 / 5

Star InactiveStar InactiveStar InactiveStar InactiveStar Inactive
تاریخ اسلام میں ماہ صفر کی حیثیت
مولانا محمد امجد خان
اسلامی سال کا دوسرا مہینہ ماہ صفر المظفر ہے تاریخ اسلام میں اس مہینے کو ممتاز حیثیت حاصل ہے اس مہینے کی 27 تاریخ کو آنحضرت صلی اللہ علیہ وسلم نے مکہ مکرمہ سے مدینہ منورہ کی طرف ہجرت فرمائی جو غلبہ اسلام اور اسلامی ریاست کے قیام کا باعث بنی اور پوری دنیا میں جو اسلام پھیلا اس کا آغاز بھی مدینہ منورہ سے ہوا۔
گویا پوری دنیا میں جو ظلمت چھائی ہوئی تھی اور ہرطرف خزاں تھی اس کا خاتمہ اسلام کی روشنی اور بہار کے ذریعے مدینہ منورہ سے ہوا۔
پھر اسی ماہ صفر میں 2ھ کو آنحضرت صلی اللہ علیہ وسلم نے حضرت علی رضی اللہ عنہ سے اپنی چہیتی بیٹی حضرت فاطمہ رضی اللہ عنہا کا نکاح فرمایا تھا
Read more ...

صلائے عام ہے یارانِ” نکتہ چیں “کےلیے

User Rating: 0 / 5

Star InactiveStar InactiveStar InactiveStar InactiveStar Inactive
صلائے عام ہے یارانِ” نکتہ چیں “کےلیے!!
مرکز اصلاح النساء سرگودھا کے انتظامی، تعلیمی اور تربیتی امور کا جائزہ
مولانا محمد کلیم اللہ حنفی
آج حافظ محمد زبیرکا ایک مضمون بعنوان”لڑکیوں کے مدارس میں ہاسٹل کی شرعی حیثیت “نظر سے گزرا، جس میں موصوف نے بنیادی طور پر دو سوال اٹھائے ہیں اور آخر میں اپنی رائے پیش کی ہے۔
پہلے سوال کا لب لباب یہ ہے کہ علماء کرام کالجوں ،یونی ورسٹیوں میں مخلوط نظام تعلیم پر سخت موقف رکھتے ہیں ، محرم کے بغیر سفر کو حرام بتلاتے ہیں،حجاب اور نقاب میں سخت فتوے دیتے ہیں۔ جبکہ خود ان کے ہاں بنات کے مدارس میں دوسرے شہروں سے آئی ہوئی لڑکیوں کے لیے ہاسٹل موجود ہوتے ہیں۔ ان کے لیے یہ کیسے جائز ہو سکتا ہے۔ ؟؟
دوسرے سوال کا خلاصہ یہ ہے کہ لڑکیوں کے مدارس کے ارباب اہتمام و انتظام مرد ہوتے ہیں اگرچہ وہ علماء ہی ہوں لیکن یہی ساری خرابیوں کی جڑ ہے۔
Read more ...